کیا صرف مُسلمان کے پیارے ہیں حُسین (رباعی)
کیا صرف مُسلمان کے پیارے ہیں حُسین
چرخِ نوعِ بَشَر کے تارے ہیں حُسین
انسان کو بیدار تو ہو لینے دو
ہر قوم پکارے گی، ہمارے ہیں حُسین
اشعار کی تقطیع
تبصرے