جس دن سے کہ ہم خستہ گرفتارِ بلا ہیں (غزل)
جس دن سے کہ ہم خستہ گرفتارِ بلا ہیں
کپڑوں میں جوئیں بخیے ٹانکوں سے سوا ہیں
اشعار کی تقطیع
تبصرے