واں اس کو ہولِ دل ہے تو یاں میں ہوں شرمسار (غزل)
واں اس کو ہولِ دل ہے تو یاں میں ہوں شرمسار
یعنی یہ میری آہ کی تاثیر سے نہ ہو
اپنے کو دیکھتا نہیں ذوقِ ستم کو دیکھ
آئینہ تاکہ دیدۂ نخچیر سے نہ ہو
اشعار کی تقطیع
تبصرے